تازہ ترین
ہوم / انٹرنیشنل / طالبان سے مذاکرات ہوسکتے ہیں ، کشمیریوں سے نہیں، بھارتی آرمی چیف کا ایک بار پھر ڈھٹائی کا مظاہرہ، افسوسناک بیان دیدیا

طالبان سے مذاکرات ہوسکتے ہیں ، کشمیریوں سے نہیں، بھارتی آرمی چیف کا ایک بار پھر ڈھٹائی کا مظاہرہ، افسوسناک بیان دیدیا

نئی دلی (مانیٹرنگ ڈیسک) طالبان سے مذاکرات کی حمایت کرنے والے بھارت کے آرمی چیف جنرل بپن راوت نے ڈھٹائی کا مظاہرہ کرتے ہوئے کہا کہ کشمیر میں مذاکرات ہماری شرائط پر ہوں گے۔بھارتی میڈیا رپورٹس کے مطابق بھارتی فوج کے سربراہ جنرل بپن راوت نے افغان طالبان سے مذاکرات کی حمایت کرتے ہوئے کہا تھا کہ اگر افغانستان میں بھارت کے مفادات ہیں تو دیگر ممالک کی طرح بھارت کو بھی طالبان سے مذاکرات کرنے چاہیے اور ہمیں کسی نہ کسی طرح ان مذاکرات کا حصہ بننا چاہیے۔ بھارتی آرمی چیف نے کشمیر کے حوالے سے ڈھٹائی کا مظاہرہ کرتے ہوئے کہا کہ ہر جگہ کے لیے الگ پالیسی ہوتی ہے اور ہر جگہ ایک ہی پالیسی نہیں چلائی جاسکتی لہذا طالبان سے تو

مذاکرات ہوسکتے ہیں لیکن مقبوضہ کشمیر میں مذاکرات صرف ہماری شرائط پر ہی ہوں گے۔یادر ہے کہ اس سے قبل بھارتی آرمی چیف نے جنرل بپن راوت نے ایل او سی پر پاکستانی حدود میں جاسوسی کا اعتراف کیا تھا۔میڈیا رپورٹس میں بتایا گیا تھا کہ بھارتی آرمی چیف کا کہنا ہے کہ پاکستان کی جانب سے شہری آبادی ایل او سی کے قریب ہے۔بھارتی آرمی چیف جنرل بپن راوت نے اس بات کا اعتراف کر لیا کہ وہ ایل او سی پر فائرنگ کرتے ہیں۔بھارتی آرمی چیف نے یہ بھی تسلیم کیا کہ پاکستان نے ہمارے 2 کواڈ کاپٹرزگرائے ہیں۔انہوں نے کہا کہ ایل او سی پر کواڈ کاپٹرز جاسوسی کے لیے بھجوائے تھے۔واضح رہے کچھ روز قبل پاکستان نے بھارت کے دو جاسوس طیارے مار گرائے تھے۔میڈیا رپورٹس میں بتایا گیا تھا کہ پاکستان کو نقصان پہنچانے کی سازشوں میں پے درپے ناکامیاں سمیٹنے کے بعد دہشت گرد سوچ رکھنے والا بھارت پاگل ہو چکا ہے۔بھارت کی سرکار کسی نہ کسی طرح پاکستان کیخلاف جنگ چھیڑنے کا بہانہ ڈھونڈ رہی ہے۔گزشتہ دنوں بھارت کے وزیراعظم مودی نے دھمکی دیتھی کہ پاکستان کو نقصان پہنچانے کی کوشش کی جائے گی۔ اس دھمکی کے بعدلائن آف کنٹرول پر بھارتی فوج نے ایک جاسوس ڈرون پاکستان کی سرحدی حدود میں داخل کرنے کی کوشش کی۔ تاہم پاکستان کی فوج نے بروقت کاروائی کرتے ہوئے پاکستان کی حدود میں داخل ہونے والے بھارتی جاسوس ڈرون کو مار گرایا تھا۔بھارت فوج کی جانب سے گزشتہ روز لائن آف کنٹرول کے باغ سیکٹر میں اپنا جاسوسی ڈرون پاکستان کی سرحدی حدود میں داخل کرنے کی کوشش کی گئی تھی، جسے بروقت کاروائی سے ناکام بنا دیا گیا تھا۔جبکہ 2جنوری کو بھارت کی جانب سے لائن آف کنٹرول پر ایک اور بھارتی جاسوس ڈرون پاکستانی سرحدی حدود میں داخل کرنے کی کوشش کی گئی۔ تاہم پاک فوج نے ایک مرتبہ پھر بروقت کاروائی کرتے ہوئے بھارتی جاسوس ڈرون مار گرایا ہے۔ اس حوالے سے پاک فوج کے شعبہ تعلقات عامہ آئی ایس پی آر کے سربراہ میجر جنرل آصف غفور نے ایک ٹوئٹ کے ذریعے تصدیق بھی کی تھی۔

Leave a Reply

Your email address will not be published. Required fields are marked *