تازہ ترین
ہوم / علاقائی / شقی القلب ماں نے اپنی ڈھائی سالہ بچی کو سمندر میں ڈبو کر ماردیا،گرفتار ہونے کے بعد دل دہلادینے والی وجہ بھی بتادی

شقی القلب ماں نے اپنی ڈھائی سالہ بچی کو سمندر میں ڈبو کر ماردیا،گرفتار ہونے کے بعد دل دہلادینے والی وجہ بھی بتادی

کراچی (نیوز ڈیسک )کراچی کے علاقے کلفٹن میں ایک افسوسناک واقعہ پیش آیا ہے جہاں ماں نے ڈھائی سالہ بچی کو سمندر میں ڈبو کر قتل کر دیا۔میڈیا رپورٹس میں بتایا گیا ہے کہ کراچی کے علاقے کلفٹن میں شقی القلب ماں کے ہاتھوں سمندر میں ڈبو کر قتل کی گئی ڈھائی سالہ بچی کی لاش آج صبح دو دریا کے قریب سے ملے گی۔رپورٹ میں مزید بتایا گیا ہے کہ ساحلی پولیس کے مطابق واقعہ ڈیفینس فیز 8 میں فرحان شاہد پارک کے قریب گزشتہ شام پیش آیا تھا۔ایس پی ساؤتھ پیر محمد شاہ کے مطابق ساحل پولیس نے ڈیفنس میں شہریوں کی نشاندہی پر 28 سالہ ملزم شکیلہ راشد کو گرفتار کیا ہے۔شہریوں نے ہی پولیس کو ملزمہ سے متعلق اطلاع دی تھی کہ مذکورہ خاتون نے اپنی کمسن بچی کو سمندر میں ڈبو کر قتل کردیا ہے۔ایس ایس پی کے مطابق ملزمہ کی ڈھائی سالہ بچی کی لاش آج عمار اپارٹمنٹ کے قریب دو دریا کی سمندر

سے ملی ہے اور قتل کا مقدمہ درج کر کے ملزم کو گرفتار بھی کر لیا گیا ہے اور آج ریمانڈ کے لیے عدالت میں پیش کیا جائے۔ایس پی انویسٹی گیشن طارق دھاریجو کے مطابق خاتون نے اپنے بیان میں کہا ہے کہ اس کے شوہر نے ایک ماہ قبل اسے بلاوجہ گھر سے نکال دیا تھا اس بنا پر بچی سے چھٹکارا پاکر خود بھی مرنا چاہتی تھی۔پولیس کے مطابق شکیلہ راشد گولی مار کے علاقے سلطان آباد کالونی کی رہائشی ہے اور اس کا شوہر راشد شاہ کراچی کے نجی اسپتال میں ملازم ہے۔واضح رہے یہ کوئی پہلا واقعہ نہیں ہے جس میں ماں نے اپنے بچے کو قتل کیا ہو اس قبل بھ غربت کی وجہ سے کئی مائیں اپنے بچوں کو موت کے گھاٹ اتار چکی ہیں۔اور وجہ یہی بتائی جاتی ہیں کہ چونکہ شوہر نے انہیں گھر سے نکال دیا ہے اور ان کے پاس بچوں کو کھلانے کے لیے کچھ نہیں ہے لہذا یہ انہیں موت کے علاوہ اور کووئی حل نظر نہیں آتا۔

Leave a Reply

Your email address will not be published. Required fields are marked *