ہوم / پاکستان / تبدیلی آگئی!عثمان بزدار بغیر پروٹوکول ایئرپورٹ پر عام شہریوں کیساتھ قطار میں لگ گئے، ویڈیو سامنے آنے پر ہر کوئی داد دینے لگا

تبدیلی آگئی!عثمان بزدار بغیر پروٹوکول ایئرپورٹ پر عام شہریوں کیساتھ قطار میں لگ گئے، ویڈیو سامنے آنے پر ہر کوئی داد دینے لگا

لاہور (نیوز ڈیسک)وزیر اعلیٰ عثمان بزدار پر اکثر پروٹوکول کے حوالے سے شدید تنقید کی جاتی ہے۔ وزیراعظم عمران خان وزیراعلیٰ پنجاب سردار عثمان بزدار کی سادگی کی اکثر اوقات تعریفیں کرتے نظر آتے ہیں لیکن وزیراعلیٰ پنجاب سردار عثمان بزدار کی سادگی کا پول اُس وقت کھُل گیا جب بہاولپور میں انہیں 11 گاڑیوں کے پروٹوکول کے ساتھ دیکھا گیا ۔وزیراعلیٰ پنجاب سردار عثمان بزدار 11 گاڑیوں کے پروٹوکول کے ساتھ سرکٹ ہاؤس سے نور محل گئے۔تاہم اب عثمان بزدار نے سادی کی ایک نئی مثال قائم کر دی۔میڈیا رپورٹس میں بتایا گیا ہے کہ وزیر اعلیٰ پنجاب عثمان بزدار عمرے کی ادائیگی کے لیے سعودی عرب روانہ ہو گئے ہیں۔وزیراعلی پنجاب عثمان بزدار سعودی عرب

روانگی کے لیے بغیر پروٹوکول کے علامہ اقبال انٹرنیشنل ائیر پورٹ پہنچے اور عام مسافروں کے ساتھ قطار میں لگ گئے۔عثمان بزدار نے عام مسافروں کی طرح قطار میں لگ کر اپنی باری کا انتظار کیا اور بوورڈنگ کارڈ لیا۔ائیر پورٹ پر موجود مسافروں نے وزیر اعلیٰ سے مصافحہ بھی کیا۔ وزیراعلیٰ پنجاب عثمان بزدار آج عمرہ کی سعادت کیلئے سعودی عرب روانہ ہو رہے ہیں۔ ایرپورٹ پر بورڈنگ کارڈ حاصل کرنے کے لیے عام شہری کی طرح سے لائین میں کھڑے ہو کر اپنی باری کا انتظار کیا ۔ خیال رہے اس سے قبل صدر مملکت ڈاکٹر عارف علوی کو بھی ائیر پورٹ پر قطار میں لگا ہوا دیکھا گیا تھا۔اس کے علاوہ جب وفاقی وزیر خارجہ شاہ محمود قریشیاقوام متحدہ کی جنرل اسمبلی کے اجلاس میں شرکت کے لیے روانہ ہو ئے۔روانگی سے قبل وزیر خارجہ کا عوامی انداز اُس وقت دیکھنے میں آیا جب وہ ائیر پورٹ پہنچے اور عام شہری کی طرح قطار میں کھڑے ہو گئے۔ وفاقی وزیر خارجہ شاہ محمود قریشی بغیر پروٹوکول کے ائیر پہورٹ پہنچے اور بورڈنگ پاس کی قطار میں عام شہری کی طرح مسافروں کے ساتھ کھڑے ہوئے۔شہریوں نے وفاقی وزیر خارجہ کو اپنے درمیان دیکھا تو انہیں گھیر لیا اور ان کے ساتھ سیلفیاں بھی بنوائیں۔جب کہ سوشل میڈیا صارفین نے بھی پی ٹی آئی رہنماؤں کی تعریف کی ہے کہ اور کہا ہے کہ وزیروں اور مشیروں کا پروٹوکول نہ لینا ایک قابل تعریف اقدام ہے۔

Leave a Reply

Your email address will not be published. Required fields are marked *