ہوم / پاکستان / پاکستان پر 4ماہ کے دوران غیر ملکی قرضوں میں کتنے ہزار ارب کا اضافہ ہوگیا، جان کر ششدر رہ جائینگے

پاکستان پر 4ماہ کے دوران غیر ملکی قرضوں میں کتنے ہزار ارب کا اضافہ ہوگیا، جان کر ششدر رہ جائینگے

اسلام آباد(نیوز ڈیسک)مالی سال کی پہلی ششماہی میں ملکی و غیر ملکی قرضے بڑھ گئے،جولائی تا دسمبر 2018 وفاقی حکومت کے قرضوں میں 2 ہزار425 ارب روپے کااضافہ ہوا ہے۔ دستاویزات کے مطابق جولائی تا دسمبر غیر ملکی قرضے 1306 ارب روپے بڑھے جب کہ پہلی ششماہی میں ملکی قرضوں میں ایک ہزار 119 ارب روپے کا اضافہ ہوا۔تحریک انصاف کی وفاقی حکومت کے پہلے چار ماہ میں ملکی و غیر ملکی قرضوں میں بھی اضافہ ہوا ہے۔ دستاویز کے مطابق ستمبر تا دسمبر 2018 قرضوں میں ایک ہزار 616 ارب روپے کا اضافہ ہوا۔ دستاویز میں بتایا گیا کہ حکومت کے پہلے 4 ماہ میں غیر ملکی قرضوں میں ایک ہزار ارب روپے اضافہ ہوا جبکہ ستمبر تا دسمبر مرکزی حکومت کے ملکی قرضے 6 سو 16 ارب روپے بڑھے ہیں۔دوسری جانب مقامی اوپن کرنسی مارکیٹ میں ہفتہ کو روپے کے مقابلے ڈالر کی

قدرمزید بڑھ گئی ۔فاریکس ایسوسی ایشن آف پاکستان کی رپورٹ کے مطابق ہفتہ کو مقامی اوپن کرنسی مارکیٹ میں ڈالرکی قدر 20پیسے بڑھ گئی جس سے ڈالر کی قیمت خرید 138روپے سے بڑھ کر138.20روپے اور قیمت فروخت138.50روپے سے بڑھ کر138.70روپے ہو گئی تاہم یورو کی قیمت خرید 156روپے اور قیمت فروخت 157.80روپے پر مستحکم رہی اسی طرح برطانوی پونڈ کی قیمت خرید 178.30روپے اور قیمت فروخت179.80روپے پر برقرار رہی ۔فاریکس ایسوسی ایشن کی ہفتہ وار رپور ٹ کے مطابق گذشتہ ایک ہفتے کے دوران انٹر بینک میں روپے کے مقابلے ڈالر کی قدر40پیسے بڑھ گئی اسی طرح مقامی اوپن کرنسی مارکیٹ میں ڈالر کی قدرمیں30پیسے کا اضافہ ہوا ۔ہفتہ وار رپورٹ کے مطابق زیرتبصرہ مدت میں روپے کے مقابلے یورو کی قدر1.1روپے اور برطانوی پونڈ کی قدر1.20روپے گھٹ گئی ۔

Leave a Reply

Your email address will not be published. Required fields are marked *