تازہ ترین
ہوم / پاکستان / پاکستان کو 2ارب ڈالر مل گئے

پاکستان کو 2ارب ڈالر مل گئے

لاہور (مانیٹرنگ ڈیسک) اسٹیٹ بینک اور ابوظہبی فنڈفارڈویلپمنٹ کے درمیان معاہدہ طے پا گیا، معاہدے کے تحت ابوظہبی 2 ارب ڈالر اسٹیٹ بینک میں جمع کروائے گا،اسٹیٹ بینک کوایک ارب ڈالر کی پہلی قسط جنوری 2019ء میں موصول ہوئی تھی۔میڈیا رپورٹس کے مطابق اسٹیٹ بینک اور ابوظہبی فنڈ فارڈویلپمنٹ کے درمیان معاہدہ ہوگیا ہے۔معاہدے کے تحت ابوظہبی فنڈفارڈویلپمنٹ نے اسٹیٹ بینک میں تین ارب ڈالر کی رقم جمع کروانی تھی۔جس میں ایک ارب ڈالر کی پہلی قسط جنوری 2019ء میں موصول ہوئی تھی۔معاہدے کی باقی رقم جلد اسٹیٹ بینک میں جمع کروا دی جائے گی۔ابوظہبی معاہدے کی باقی رقم 2 ارب ڈالر اسٹیٹ بینک میں جمع کروائے گا۔ واضح رہے جنوری کے آخری ہفتے میں

ابوظہبی فنڈ برائے ترقی نے پاکستان کو مالیاتی پالیسی میں تعاون کیلئے اعلان کردہ 3 ارب ڈالر اسٹیٹ بینک آف پاکستان کو منتقل کرنے کے انتظام کو حتمی شکل دی تھی،اس مالی تعاون کا اعلان دسمبر 2018ء میں صدر شیخ خلیفہ بن زایدالنیہان، ابوظہبی کے ولی عہد اور عرب امارات کی مسلح افواج کے نائب سپریم کمانڈر شیخ محمد بن زاید کی ہدایت پر کیا گیا تھا۔متحدہ عرب امارت(یو اے ای) کی نیوزایجنسی وام کے مطابق ابوظہبی فنڈ کے ڈی جی محمد سیف السویدی اور سٹیٹ بنک آف پاکستان کے گورنر طارق باجوہ نے یہاں فنڈ کے ہیڈکوارٹرز میں اس معاہدے پر دستخط کئے۔ اس موقع پر پاکستان کے سفیر معظم احمد خان ، ابوظہبی فنڈ کے ڈپٹی ڈی جی خلیفہ القبیسی اور دیگر سینئر عہدیدار وہاں موجود تھے ۔اس موقع پر خطاب میں محمد سیف السویدی نے کہا کہ عرب امارات کی قیادت پاکستان کا معاشی استحکام چاہتی ہے اور انہی مقاصد کیلئے اسٹیٹ بنک آف پاکستان کو یہ 3 ارب ڈالر منتقل کئے جارہے ہیں۔اس سے حکومت پاکستان کو معاشی چیلنجز سے نمٹنے میں گرانقدر تعاون حاصل ہوگا ۔انہوں نے کہا کہ ابوظہبی فنڈ اور حکومت پاکستان کے درمیان 1981 سے مضبوط تعلقات قائم ہیں، اس کے تحت پاکستان میں سماجی ، معاشی ترقی کیلئے گرانقدر اقدامات کئے گئے ہیں ۔تقریب سے خطاب میں سٹیٹ بینک آف پاکستان کے گورنرطارق باجوہ نے عرب امارات کی قیادت کیلئے اظہار تشکر کیا اور کہاکہ ابوظہبی فنڈ کے تعاون سے پاکستان کو پائیدار ترقی اور دیرپا معاشی استحکام حاصل کرنے کی کوششوں میں بہت تعاون ملا ہے ۔ابوظہبی فنڈ کی طرف سے پاکستان کو ماضی سے لیکر اب تک ڈیڑھ ارب درہم کا مالی تعاون بھی فراہم کیا جاچکا ہے جو کہ پانی ، تعلیم ، صحت جیسے عوامی شعبوں پر خرچ کئے گئے ۔ابوظہبی فنڈ نے پاکستان میں

ٹرانسپورٹ کے شعبے کی ترقی کیلئے 2013ء میں 227 ملین درہم فراہم کئے تھے جس کے تحت عرب امارات پاکستان دوستی کی سڑک تعمیر کی گئی تھی ۔سال 2013ء میں اسی تعاون کے تحت پاکستان میں صحت کے دو منصوبوں کیلئے 230 ملین درہم بھی دیئے گئے۔اس کے تحت ایک ہزار بستروں والے ہسپتال کی تعمیر پر 217 ملین درہم خرچ ہوئے جس سے پاک فوج کے عملہ اور ان کے اہلخانہ کو علاج معالجہ کی سہولیات میسر آئیں، لاہور میں شیخ زاید ہسپتال کیلئے 13ملین درہم دیئے گئے ۔تعلیمی شعبہ کیلئے بھی 2013ء میں 46 ملین درہم دیئے گئے جوکہ تربیتی کالجز کے قیام پر صرف ہوئے۔ 2009ء میں شیخ زاید انٹرنیشنل اکیڈیمی کی توسیع پر 14 ملین درہم خرچ ہوئے۔ ابوظہبی فنڈ نے 1981 میں تربیلا ڈیم کی بحالی کیلئے بھی 66 ملین درہم دیئے تھے ۔

Leave a Reply

Your email address will not be published. Required fields are marked *