تازہ ترین
ہوم / اہم خبریں / ن لیگ میں مرکز اور پنجاب میں درجنوں اراکین اسمبلی پر مشتمل فارورڈ بلاک بن گئے،باضابطہ اعلان کب کیا جائیگا،دھماکہ خیز خبر

ن لیگ میں مرکز اور پنجاب میں درجنوں اراکین اسمبلی پر مشتمل فارورڈ بلاک بن گئے،باضابطہ اعلان کب کیا جائیگا،دھماکہ خیز خبر

لاہور(مانیٹرنگ ڈیسک) تحریک انصاف کے رہنماء شوکت بسرا نے دعویٰ کیا ہے کہ ن لیگ میں مرکزاور پنجاب میں فاروڈ بلاک بن گیا ہے، فاروڈ بلاک کے ارکان جلد باضابطہ اعلان کریں گے، مرکزاور پنجاب میں 20،20 ارکان شامل ہیں،ایم پی اے ارشد بھی شامل ہیں۔ انہوں نے اپنے ایک بیان میں دعویٰ کیا ہے کہ ن لیگ میں مرکز اور پنجاب میں فارورڈ بلاک بن گئے ہیں۔ن لیگ کے ارکان جلد باضابطہ فاروڈ بلاک کا اعلان کریں گے۔ شوکت بسرا نے کہا کہ پنجاب میں بھی مسلم لیگ ن کے 20 کے قریب ارکان فاورڈ بلاک بنا چکے ہیں۔مرکز میں ن لیگ کے 20 سے 25ارکان فاروڈ بلاک بنا چکے ہیں۔انہوں نے کہا کہ میرے حلقے سے ایم پی اے ارشد بھی فاروڈ بلاک میں شامل ہیں۔انہوں نے کہا کہ

ن لیگی ارکان اسمبلی اپنے لیڈرز کی کرپشن کا ساتھ دینے کو تیار نہیں ہیں۔واضح رہے الیکشن 2018ء سے قبل اور بعد میں اس طرح کی خبریں تجزیہ کار اور حکومتی جماعت سے منسلک ارکان دیتے رہے کہ ن لیگ ٹوٹ جائے گی، مسلم لیگ ن کے ٹکڑے ٹکڑے ہوجائیں گے، ن لیگی قیادت ملک چھوڑ کربھاگ جائے گی، لیکن ان تمام باتوں کے باوجود ن لیگ نے الیکشن 2018ء میں بھرپور نشستیں جیتیں، ن لیگ وفاق اور پنجاب میں دوسری بڑی سیاسی جماعت بن گئی۔جبکہ پنجاب میں عددی لحاظ سے بڑی جماعت بن کرسامنے آئی لیکن پی ٹی آئی نے آزاد ارکان کو شامل کرکے حکومت سازی کرلی، اور اس کے ساتھ ن لیگی قیادت نوازشریف ، شہبازشریف جیل چلے گئے، بعدازاں دونوں ضمانت پر باہر آگئے لیکن ابھی بھی مقدمات کا سامنا کررہے ہیں، اس کے ساتھ ساتھ یہ خبریں بھی آئیں کہ نوازشریف کے جیل سے باہر آتے ہیں پنجاب میں پی ٹی آئی کی حکومت ختم ہوجائے گی اور ن لیگ پی ٹی آئی کے ارکان توڑ کر پنجاب میں حکومت سازی کرے گی۔لیکن یہ خبریں بھی محض چہ مگوئیاں ثابت ہوئیں۔ اب ایک پھر ن لیگ کے ارکان اسمبلی کو بہکانے کے لیے اس طرح کا شوشہ چھوڑا گیا ہے، شوشہ اس لیے لگ رہا ہے کہ یہ بیان شوکت بسرا کے ذریعے ہی کیوں سامنے لایا گیا؟ جبکہ یہ بھی ہوسکتا تھا کہ فاروڈ بلاک بن جاتا اور پھر وہ اعلان بھی کردیتے، پھر ایسے وقت میں بیان کہ جب حکومت خود مختلف معاملات میں پھنسی ہوئی ہے۔حکومت عوام کو ریلیف دینے میں ناکام ہے، جس سے حکومت کو شدید دباؤ کا بھی سامنا ہے،حکومت کو آئی ایم ایف پیکج، بجٹ ،ایف اے ٹی ایف سمیت پارٹی کے اندرسیاسی لڑائیوں اور اتحادیوں کی فرمائشوں کوپورا کرنے کے کڑے امتحان سے بھی گزر رہی ہے۔ اس کا مطلب فاروڈ بلاک بنانے کی کوششیں جاری ضرور ہوں گی لیکن ابھی بات بن نہیں رہی، بلکہ یہ بیان سیاسی حربہ لگ رہا ہے کہ تاکہ ارکان بہک جائیں اور فوری رابطے شروع کردیں۔ تاہم حقیقت کیا ہے اس کا آئندہ دنوں پتا چل جائے گا۔

Leave a Reply

Your email address will not be published. Required fields are marked *