تازہ ترین
ہوم / اہم خبریں / سیکیورٹی فورسز کی بروقت کاروائی،3دہشتگرد واصل جہنم، خودکش جیکٹ اور10کلوبارود برآمد، کراچی بڑی تباہی سے بچ گیا

سیکیورٹی فورسز کی بروقت کاروائی،3دہشتگرد واصل جہنم، خودکش جیکٹ اور10کلوبارود برآمد، کراچی بڑی تباہی سے بچ گیا

کراچی(نیوز ڈیسک)کراچی پولیس نے ناردرن بائی پاس کے قریب مبینہ مقابلے میں القاعدہ کے 3 دہشت گرد مارنے کا دعویٰ کیا ہے۔ پولیس حکام کا کہنا ہے کہ ملزمان کراچی میں دہشت گردی کی منصوبہ بندی کر رہے تھے۔پولیس حکام کے مطابق انہیں خفیہ اطلاع ملی کہ ناردرن بائی پاس کے قریب خدا بخش گوٹھ میں کالعدم تنظیم کے کارندے موجود ہیں جس پر پولیس پارٹی پہنچی تو ملزمان نے اس پر فائرنگ کردی۔پولیس کا کہنا ہے کہ دونوں طرف سے فائرنگ کا تبادلہ ہوا جس میں 3 دہشت گرد موقع پر ہلاک اور 2 فرار ہوگئے کی تلاش جاری ہے۔ جائے وقوعہ سے پولیس کو خودکش جیکٹ اور اسلحہ ملا ہے۔ بم ڈسپوزل اسکواڈ نے جائے وقوعہ کادورہ کیا،بی ڈی ایس انچارج عابد شاہ کے مطابق دہشتگردوں

کے ٹھکانےسے ملنے والی خودکش جیکٹ میں 10کلوبارود تھا،دستی ،ڈیٹونیٹر ایمونیشن اور بارودتیارکرنے کاسامان بڑی تباہی مچاسکتاتھا۔علاقہ مکین کےمطابق فائرنگ ایک گھنٹے تک جاری رہی،دہشتگردوں کاٹھکانہ ڈیڑھ ماہ سے خالی تھا،پہلے کچھ افرادمکان میں بیٹھ کرپراپرٹی کاکام کرتے تھے ۔ پولیس کے مطابق، ہلاک 3دہشتگردوں میں سے 2کی شناخت بھی کرلی جبکہ دہشتگردوں کے ٹھکانے سے دیگرشواہدتحویل میں لے کرمکان کوسیل کردیا گیا۔پولیس ذرائع کے مطابق ہلاک ہونے والے دہشتگردوں میں سے ایک کی شناخت طلعت محمود عرف یوسف عرف عبداللہ کے نام سے ہوئی ہے، جس کا تعلق کالعدم القاعدہ عبدالرزاق عرف راجہ گروپ سے تھا اور سانحہ صفورہ میں ملوث دہشت گردوں کا قریبی ساتھی تھا۔

Leave a Reply

Your email address will not be published. Required fields are marked *