تازہ ترین
ہوم / شوبز / میشا شفیع کے الزامات، خواتین کے بعد مرد بھی سامنے آنا شروع، میشا شفیع بلیک میلر ہے اس نے میرے ساتھ۔۔۔ گلوکارہ کے قریبی شخص نے سنگین الزام عائد کردیا

میشا شفیع کے الزامات، خواتین کے بعد مرد بھی سامنے آنا شروع، میشا شفیع بلیک میلر ہے اس نے میرے ساتھ۔۔۔ گلوکارہ کے قریبی شخص نے سنگین الزام عائد کردیا

اسلام آباد (نیوز ڈیسک)میشا شفیع کی جانب سے اداکار علی ظفر پر جنسی طور پر ہراساں کرنے کے الزامات کے بعد کئی لوگ میشا شفیع کی حمایت کرتے نظر آئے تو کئی علی ظفر کے ساتھ کھڑے نظر آئے۔ اس کے بعد گلوکار و اداکار علی ظفر نے گلوکارہ و ماڈل میشا شفیع کے خلاف انتہائی قدم اٹھاتے ہوئے اسے قانونی نوٹس بھیج دیا ہے۔ ایک نجی ٹی وی چینل کی رپورٹ کے مطابق گلوکار علی ظفر اور میشا شفیع

کی لڑائی شدت اختیار کر گئی ہے، علی ظفر نے اپنی شہرت کو نقصان پہنچانے پر ماڈل و گلوکارہ میشا شفیع کو دس کروڑ روپے ہرجانے کا قانونی نوٹس بھیج دیا ہے۔ میشا شفیع کے سابق منیجر فہد رحمان نے ایسے انکشافات کیے ہیں کہ میشا شفیع منہ چھپانے پر مجبور ہو جائیں گی، سینئر صحافی عمر قریشی نے ٹوئٹر پر فہد رحمان کا بیان شیئر کیا ہے، جس میں فہد رحمان نے کہا کہ میں میشا اور علی ظفر کو بہت عرصے سے جانتا ہوں اور اس وقت سے جانتا ہوں جب دونوں کو شہرت بھی نہیں ملی تھی، میں نے دو دہائیوں میں انہیں ملنے والی شہرت دیکھی ہے۔بدقسمتی سے مجھے میشا شفیع کے ساتھ کام کرنے کا موقع ملا۔اس کے خوفناک جارحانہ مزاج اور غصے کے علاوہ، ایک موقع پر، مجھے اس نے ایک شو سے صرف 5 منٹ پہلے بلیک میل کرتے ہوئے میری ایجنسی کو ملنے والی کمیشن سے حصہ دینے کا مطالبہ کیا اور ایسا نہ کرنے کی صورت میں پرفارم نہ کرنے کی دھمکی دی، ٹرپ سے پاکستان واپس آ کر اور ایک کلائنٹ کی حیثیت سے میشا شفیع کو نکالنے پر مجھے یہ پتہ چلا کہ میشادوستوں اور کولیگز میں مجھ پر یہ الزام عائد کر رہی ہے کہ میں اس کی فیس کھا گیا۔ اس کے علاوہ کچھ اور واقعات بھی ہوئے لیکن میں ان سب میں نہیں پڑنا چاہتا، یہ سب کچھ 2008-09ء میں ہوا۔ میشا شفیع کے سابق منیجر فہد رحمان نے کہا کہ اب مجھے یہ معلوم نہیں کہ علی ظفر اور اس کے درمیان کیا ہوا لیکن میں یہ ضرور جانتا ہوں کہ میشا شفیع کسی کو بلیک میل کرنے اور اس کی عزت

خراب کرنے کی پوری صلاحیت رکھتی ہے، کسی بھی ٹھوس ثبوت کے بغیر، میں یہ کہوں گا کہ میشا شفیع نے جو کچھ بھی کہا اس پر یقین کرنا مشکل ہے۔

Leave a Reply

Your email address will not be published. Required fields are marked *