حسان نیازی کی سیاسی وابستگی سامنے آگئی، وزیراعظم کے بھانجے کا تعلق کس سیاسی جماعت سے ہے،جانئے

0

لاہور (مانیٹرنگ ڈیسک)سینئر تجزیہ کار منصور علی خان نے سماجی رابطے کی ویب سائٹ پر ٹویٹ کرتے ہوئے کہا ہے کہ حسان نیازی حفیظ اللہ نیازی کے بیٹے ہیں جو کہ کالم نگار ہیں۔ اور بہت سے معاملات پر عمران خان سے اختلافات رکھتے ہیں۔ منصو ر علی خان نے حسان نیازی کی تصویر شیئر کرتے ہوئے کہا کہ حسان نیازی تحریک انصاف اور وزیراعظم عمران خان کے سپورٹر رہے ہیں۔یاد رہے پنجاب انسٹی ٹیوٹ ا ٓف کارڈیالوجی پر وکلا ء کے حملے کے واقعہ کے دوران وزیراعظم عمران خان کے بھانجے حسان نیازی کی پولیس موبائل جلاتے ویڈیو سامنے آنے پر ٹوئیٹر صارفین شدید تنقید کا نشانہ بنا یا۔ ٹوئیٹر صارف نے کہا کہ

حسان نیازی اپنے ٹوئیٹراکاونٹ سے ہٹا دیں کہ آپ انسانی حقوق کے علمبردار ہیں ، آپ پولیس کی گاڑی کو توڑتے ہوئے کس انسانی حقوق کی بات کر رہے ہیں۔مزید کہا اپنے نام کے ساتھ "گنڈا بدمعاش” لکھیں ، عمران خان کو اپنے بھانجے کے کرتوتوں پر ایکشن لینا چاہیے۔سماجی رابطے کی ویب سائٹ ٹوئیٹر پر جاری پیغام میں ایک صارف نے سوال کیا کہ کیا پولیس موبائل جلانے والے حسان نیازی کو بھی گرفتار کیا جائے گا؟ ایک صارف نے عمران خان کے بھانجے کی ویڈیو اور تصاویر سامنے آنے پر اس کو پنجاب حکومت کا امتحان قرار دے دیا۔صارف نے کہا دیکھنا یہ ہے کہ پنجاب حکومت قانون کو بچاتی ہے یا وزیراعظم عمران خان کے بھانجے کو۔حسان نیازی کو تنقید کا نشانہ بناتے ہوئے ایک صارف نے لکھا کہ نا انصافی پر مبنی یہ حملہ حسان نیازی نے پلان کیا اور فنانس کیا۔تاہم وزیراعظم عمران خان نے بھانجھے حسان نیازی نے کہا کہ ویڈیو کلپ دیکھنے کے بعد میں بہت ہی شرمندا ہوں۔میں صرف ڈاکٹرز کیخلاف قانونی کارروائی کیلئے محدود احتجاج کے لیا گیا۔ حسان نیازی نے کہاتھا کہ میں اپنی اس احتجاج میں شمولیت کی مذمت کرتا ہوں۔حسان نیازنے اپنے ایک اور ٹویٹ میں کہا کہ اس معاملے پر سیاست نہیں کرنی چاہیے۔یاد رہے پی آئی سی ہسپتال پر حملہ کرنے اور متعدد مریضوں کے جاں بحق ہونے کے باوجود وزیراعظم کے بھانجے نے وکلاء کی حمایت کی تھی ، حسان نیازی کا کہنا تھا کہ جو ہوا اس کیلئے وکلاء کو ذمے دار نہیں ٹھہرایا جا سکتا، وزیراعلی عثمان بزدار اس واقعے میں ملوث ہیں۔