حسان نیازی کی گرفتاری، وزیراعظم تو کچھ نہ بولے لیکن عثمان بزدار نے بڑااعلان کردیا

0

لاہور(نیوز ڈیسک)وزیراعلیٰ پنجاب سردار عثمان بزدار پی آئی سی واقعے سے تاحال لاعلم ہیں، انہوں نے کہا کہ واقعے کی تحقیقات مکمل ہونے کے بعد ہی کچھ کہا جاسکتا ہے، حسان نیازی سمیت جو بھی لوگ سی سی ٹی وی کیمرے میں نظر آئیں گے، ان کیخلاف قانون کے مطابق کارروائی ہوگی۔ تفصیلات کے مطابق وزیراعلیٰ پنجاب عثمان بزدار ابھی تک اس بات لاعلم ہیں کہ پنجاب انسٹیٹیوٹ آف کارڈیالوجی میں حملہ کیسے ہوا؟وزیراعلیٰ پنجاب نے نجی ٹی وی سے گفتگو میں بتایا کہ کابینہ کی کمیٹی برائے امن وامان کی روزانہ کی بنیاد پر میٹنگ ہوتی ہے، اس میں جو بھی فیصلے ہوتے ہیں ان پر عملدرآمد کیا جاتا ہے۔ہم نے کابینہ کمیٹی میں پی آئی سی واقعے کی تمام صورتحال کابھی جائزہ لیا ہے۔عثمان بزدار نے کہا کہ واقعے سے متعلق مکمل تحقیقات کی جارہی ہیں، کہ یہ واقعہ کیوں پیش آیا، کیسے پیش آیا، اس کے کیا محرکات ہیں۔ تحقیقات مکمل ہونے کے بعد ہی کچھ کہا جاسکتا ہے۔

جب ان سے پوچھا گیا کہ تحقیقات کب تک مکمل ہوجائیں گی؟ اس پر وزیراعلیٰ نے کوئی ڈیڈلائن نہ دی۔وزیراعلیٰ پنجاب نے وزیراعظم عمران خان کے بھانجے حسان نیازی کی گرفتاری کے سوال پر جواب گول کرتے ہوئے کہا کہ جو بھی لوگ سی سی ٹی وی کیمرے میں نظر آئیں گے، ان کیخلاف کاروائی کریں گے ، قانون سب کیلئے برابر ہے۔ دریں اثناں وزیر خارجہ شاہ محمود قریشی نے ملتان میں میڈیا سے گفتگو کرتے ہوئے کہا کہ عمران خان نے حسان نیازی کی گرفتاری پرکوئی پابندی نہیں لگائی۔انہوں نے کہا کہ وکلااورڈاکٹرز دونوں معاشرے کے اہم طبقات ہیں۔ہم چاہتے ہیں معاملہ افہام تفہیم اور قانون کے مطابق حل ہوجائے۔ وزیر اعظم عمران خان نے کہا کہ قانون کی حکمرانی ہونی چاہیے۔ حسان نیازی کی گرفتاری میں کسی نے رکاوٹ ڈالی؟ حسان نیازی سے متعلق جو بھی انتظامیہ سمجھے فیصلہ کرے۔حسان نیازی کی گرفتاری پرعمران خان نے کوئی پابندی نہیں لگائی۔