غریب عوام کو ڈاکٹروں کی بھاری فیسوں سے نجات مل گئی، حکومت نے علاج کیلئے بڑاریلیف دیدیا

لاہور(نیوز ڈیسک) وزیراعظم عمران خان کا عوام کو ڈاکٹرز کی بھاری فیسوں اور مہنگے علاج نجات دلانے کا فیصلہ کرلیا۔ تفصیل کے مطابق وزیرا عظم عمران خان نے صحت کارڈ کی سہولت کو پاکستان بھر میں پھیلانے کا فیصلہ کر لیا ہے۔ خیبر پختونخوا کے62 فیصد عوام کو مفت علاج کی سہولت مل گئی۔ صحت انصاف کارڈ انضمام شدہ قبائلی علاقوں میں صحت انصاف کارڈ کی فراہمی کا 100 فیصد ٹارگٹ مکمل کر لیا گیا ہے۔وزیراعظم عمران خان نے صحت انصاف کارڈ کی کامیابی کو دیکھتے ہوئے اسے پاکستان بھر میں پھیلانے کا فیصلہ کیا ہے۔ وزیراعظم نے اجراء اور نتائج کی تفصیلات طلب کر لی ہیں۔فاٹا کے شہری اپنے شناختی کارڈ کو بطور صحت انصاف کارد استعمال کر سکیں گے۔ وزیر اعظم عمران خان

کے صحت کی سہولت فراہم کرنے پر شہریوں نے اظہارتشکر کیا، شہریوں کا کہنا ہے کہ شہریوں کا کہنا ہے کہ ڈاکٹرز کی بھاری فیسوں کے باعث علاج کرانے سے قاصر تھے۔خیال رہے کہ خیبر پختون خوا کے 62 فی صد افراد کو مفت علاج معالجے کی سہولت مل گئی ہے، فروری 2020 تک صوبے میں 100 فی صد مفت علاج کی سہولت فراہم ہوگی، وزیر اعظم نے 2020 میں ملک بھر میں مستحق افراد تک صحت کارڈ پہنچانے کی ہدایت جاری کر دی ہے۔صحت کارڈ رکھنے والا ہر شہری 7 لاکھ 20 ہزار روپے تک کا مفت علاج کرا سکتا ہے، سرکاری اسپتال کے علاوہ بڑے نجی اسپتالوں میں بھی مفت علاج کی سہولت ہوگی، سرجری، آپریشن یا طبی معائنے کے لیے ہزاروں روپے خرچ نہیں کرنے پڑیں گے۔